مٹھی: سپریم کورٹ مانیٹرنگ کمیٹی کا اجلاس، پانی ودیگر سہولیات یقینی بنانے کی ہدایات

0

مٹھی (ای این این) سپریم کورٹ آف پاکستان کی جانب سے تھرپارکر کی صورتحال کے متعلق بنائی جانے والی مانیٹرنگ کمیٹی کے کنوینر ریاض احمد صدیقی اوردیگر ممبران جس میں ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج تھرپارکر مشتاق احمد کلوڑ، ڈویزنل کمشنر میرپورخاص عبدالوحید شیخ، ڈاکٹر سونو کھنگرانی نے دربار ہال مٹھی میں متعلقہ محکموں کے افسران کے ساتھ ایک اجلاس منعقد کیا۔ اجلاس میں ڈپٹی کمشنر تھرپارکر ڈاکٹر شہزاد طاہر کے علاوہ صحت، تعلیم، محکمہ جھنگلات، پبلک ہیلتھ انجینئرنگ، روڈس اور دیگر محکموں کے افسران نے شرکت کی۔ اس موقع پر مختلف محکموں جن میں تعلیم، صحت اور پینے کے پانی کی فراہمی کو بہتربنانے کے لئے تفصیلی بات چیت کی گئی۔
اجلاس میں کمیٹی کے کنوینر ریاض احمد صدیقی نے کہا کہ تھر کی صورتحال سے مکمل طور سے آگاہ ہیں اور حکومت کی کوشش ہے کہ تھر کی عوام کے لئے بھی پینے کے صاف پانی، تعلیم اور صحت کی زیادہ سے زیادہ سہولیات فراہم کی جائیں گی تاکہ یہاں کے بنیادی مسائل حل ہوسکیں اس مقصد کے لئے میں خود تھرپارکر  میں آکر متعلقہ افسران  اور ضلعی انتظامیہ سے میٹنگ کررہا ہوں۔
انھوں نے محکمہ صحت کے افسران کو ہدایت کی کہ وہ صحت کی سہولیات کی فراہمی بہتر علاج اور مفت ادویات کی فراہمی کو یقینی بنایا جائیں یہ تھر کی عوام کا حق ہے جو بناتاخیر ان کو مہیا کیا جائے اور صحت کے شعبے میں کسی قسم کی کوتاہی برداشت نہیں کی جائیگی۔
کنوینر ریاض احمد صدیقی نے محکمہ تعلیم کے افسران کو ہدایت کی وہ تھرپارکر میں تعلیمی معیار کو مزید بہتر بنانے  کے لئے اقدامات کریں اور اس سلسلے میں درپیش آنے والے مسائل کو فوری حل کے لئے اقدامات کئے جائیں۔
کمیٹی کے کنوینر نے محکمہ پبلک ہیلتھ انجیئرنگ کے افسران کو تھرپارکر میں پینے کے پانی کی کمی کو دور کرنے کے لئے آر اوپلانٹس کی مرمت اور فعال بنانے کے لئے ہنگامی بنیادوں پر کام کرنے کی ہدایات کیں  اور کہا کہ ایک مکمل شیڈول ترتیب دے کر باقی مانندہ آر او پلانٹس جلد از جلدلگائے تاکہ تھرپارکر میں پینے کے صاف پانی کا مسئلا حل ہوسکے۔کمیٹی سربراہ نے محکمہ جھنگلات کے افسران کو ہدایت کی کہ محکمہ جھنگلات کی زمینوں پر تھرپارکر میں بارش کے پانی پر ہونے والی فصلیں اور مویشیوں کے چارے کی کاشت کے لئے اقدامات کئے جائیں۔

About Author

Leave A Reply