بچوں سے زیادتی اور وڈیو وائرل کرنے والا رٹائرڈ استاد کون ہے؟ سکرنڈ میں مظاہرہ

0

سکرنڈ (رپورٹ: گل محمد لغاری/ ای این این ایس) تھری میرواہ میں 10 سالہ معصوم ساحل سے رٹائرڈ استاد سارنگ شر کی جنسی زیادتی کے بعد سوشل میڈیا پر وائرل کی گئی ویڈیو کے خلاف جسقم رہنما مسعود شاہ، رانو جلبانی، موریو میر بھر کی قیادت میں سکرنڈ کے قاضی سرفراز چوک پر احتجاجی مظاہرہ کرتے ہوئے سارنگ شر کے خلاف سخت نعرے بازی کی گئی۔
اس موقع پر مظاھرین کہنا تھا کہ سارنگ شر کی جانب سے جنسی زیادتی کے عمل کی سخت مذمت کرتے ہیں اور مطالبہ کرتے ہیں کہ ملزم کو گرفتار کیا جائے۔
خیال رہے کہ ملزم ایچ ایس ٹی تھا اور کچھ عرصہ قبل رٹائرڈ ہوا۔ ذرائع کے مطابق ان کا تعلق تحصیل فیض گنج سے ہے اور تبادلہ کرواکر تھری میرواہ میں تعینات ہوا تھا۔
شہر میں وہ اپنے بیٹے کے ساتھ رہتا تھا اور لاک ڈائون میں پڑوسیوں کہا کہ وہ مفت میں بچے ہڑھائیگا جس پر لوگوں نے بچے اس کے ٹیوشن کے لیے چھوڑے تاہم وہ اپنا منہہ کالا کرتا رہا۔ ذرائع کے مطابق اس کی دو شادیاں ہیں اور 61 سال کے قریب عمر ہے۔
پولیس نے اب تک اس کے خلاف دو مقدمات درج کیے ہیں لیکن اس کو گرفتار نہیں کر سکی۔
ذرائع کے مطابق ملزم مہران ٹیچرس ایسوسیئیشن کے ساتھ کام کرتا رہا ہے۔ دوسری جانب سوشل میڈیا پر بھی ملزم کا سخت سزا کے مطالبات سامنے آ رہے ہیں۔

About Author

Leave A Reply