Lodhran’s girl was raped and murdered by cousin: Police-لودھراں میں ملزم نے 6 سال کی بچی کے ساتھ جنسی زیادتی اور قتل کا اعتراف کر لیا

0

LODHRAN (ENN) The six-year-old girl raped and killed in Lodhran was kidnapped, raped and murder by her cousin, the police revealed here on Sunday. District Police Officer Lodhran Ameer Taimur said the son of Aasma’s paternal uncle first kidnapped the minor from her house on February 19, and then raped her at nearby place.

The police official added that the accused, 18-year-old Ali Haider, killed the girl as she had recognised him. Haider then dumped the six-year-old’s body in a water ditch near her house, which was found on February 23.

A case was filed by the girl’s brother Javaid, following which police had arrested four suspects, including two of Aasma’s cousins. Police told that during the interrogation, the accused confessed to the crime.

لودھراں میں ملزم نے 6 سال کی بچی کے ساتھ جنسی زیادتی اور قتل کا اعتراف کر لیا

لودھراں(ای این این) لودھراں پولیس نے 6 سال کی عاصمہ کے قتل اور جنسی زیادتی کیس میں ملزم کو گرفتار کر لیا ہے۔ اس حوالے سے تفصیلات بتاتے ہوئے ڈسٹرکٹ پولیس آفیسر  امیر تعمور نے میڈیا کو بتایہ کہ عاصمہ کو اس کے  چچا کے بیٹے نے 19 فروری کو اغوا کیا اور اس کے ساتھ جنسی زیاتی کی۔ انہوں نے مزید بتایہ کہ 18 سال کے علی حیدر  نے عاصمہ کو بعد ازاں قتل کر کے لاش گندے پانی  میں  دبادی تھی، جو لوگوں نے ہفتے کو دیکھی اور پولیس کو اطلاع دی گئی۔ڈی پی او نے بتایہ کہ ملزم نے اپنے جرم کا اعتراف کرلیاہے۔ تاہم مزید تفتیش کی جارہی ہے۔ بچی کے بھائی جاوید نے  اس کی گمشدگی کا  مقدمہ درج  کرایا تھا اور پولیس نے  اس دوارن چار ملزمان کو تفتیش کے لیے حراست میں لیا تھا۔

About Author

Leave A Reply