پاکستان میں سینیٹ چیئرمین کو ہٹانے کا طریقہ؟زرداری کیوں اب “مان” گئے؟ - Eye News Network

پاکستان میں سینیٹ چیئرمین کو ہٹانے کا طریقہ؟زرداری کیوں اب “مان” گئے؟

0

اسلام آباد (رپورٹ/تجزیہ لالا حسن) ملک میں حزبِ اختلاف کی جماعتوں پاکستان پیپلز پارٹی، نواز لیگ، جے یو آئی، اے این پی و دیگر نے اس وقت سینیٹ چیئرمین محمد صادق سنجرانی کو ہٹانے کے لیے عدم اعتماد کی تحریک لانے کا  اعلان کر رکھا ہے۔

پاکستان کے آئین کے مطابق سینیٹ چیئرمین کو سادہ اکثریت سے ہٹایا جا سکتا ہے۔ اس وقت سینیٹ کے اراکین کی کل تعداد 104 ہے۔ سینیٹ چیئرمین کی تبدیلی کے لیے 53 اراکین کے ووٹ درکار ہوں گے۔

اس وقت سینیٹ میں پارٹی پوزیشن کے مطابق پاکستان پیپلز پارٹی، پاکستان مسلم لیگ نواز، عوامی نیشنل پارٹی اور حزبِ اختلاف کی دیگر جماعتوں کے ارکان کی کل تعداد 66 کے قریب ہے جبکہ حکومتی اتحاد کے سینیٹرز کی تعداد صرف 38 کے قریب ہے۔

بظاہر تو یہ بہت سادہ معاملہ لگتا ہے تاہم  پاکستان میں “سرکاری پارٹی” کے حمایت یافتہ چیئرمین کو ہٹانہ اتنا آسان نہیں ہوگا کیونکہ اس ملک میں اس طرح کی مثالیں بہت کم ملتی ہیں۔

خیال رہے کہ صادق سنجرانی پی پی پی اور پی ٹی آئی کی حمایت سے چیئرمین بنے تھے، تاہم  ان کا تعلق دونوں جماعتوں سے نہیں تھا، اس لیے انہیں کافی “طاقتور” خیال کیا جاتا ہے۔ پی ٹی آئی نے سینیٹ انتخابات کے دوران اپنی مخالف ترین جماعت پی پی کے امیدوار ڈپٹی چیئرمین سلیم مانڈوی والا کو ووٹ کیا تھا۔

یاد رہے کہ اس وقت کی حکمران جماعت پاکستان مسلم لیگ نواز نے سابق سینیٹ چیئرمین رضا ربانی کو چیئرمین بنانے پر حمایت کا اعلان کیا تھا تاہم پی پی رہنما آصف علی زرداری نے یے کہہ کر انکار کیا تھا کہ “میں یے نہیں چاہتا”۔ جبکہ اب  جیل میں جانے کے بعد وہ سینیٹ چیئرمین سنجرانی کو ہٹانے کا اعلان کر چکے ہیں۔

About Author

Leave A Reply