ڈاکٹر پر تشدد: خیبرپختونخوا کے وزیر صحت کے خلاف احتجاج کا اعلان، الٹی میٹم جاری

0

ایبٹ آباد (ای این این)خیبر پختونخواہ کےصوبائی وزیر صحت کے خلاف صوبہ بھر کے ڈاکٹر سراپا احتجاج بن گئے ہیں۔
خیبر ٹیچنگ ہاسپٹل کے ڈاکٹر پر بد ترین تشدد پر صوبائی وزیر صحت کو کابینہ سے نکالنے کیلئے 48 گھنٹے کی ڈیڈ لائن دیکر صوبہ بھر کے ہسپتالوں میں ایمرجنسی سروسز بھی بند کرنے کی دھمکی دی ہے۔
گزشتہ روز خیبر ٹیچنگ ہاسپٹل میں ہونے واقعہ پر پراونشل ڈاکٹر ایسوسی ایشن کے صوبائی نائب صدر وممبر خیبر پختونخوا ڈاکٹر کونسل ڈاکٹر راحیل شہزاد نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ صوبائی وزیر صحت نے غنڈہ گردی کرتے ہوئے ایسو سی ایٹ پروفیسر سرجن ضیاء الدین پر اپنے اختیارات سے تجاوز کرتے ہوئے بدترین تشدد کیا۔
ہم انکے اس فعل کی بھرپور مذمت کرتے ہیں اور یہ بتا دینا چاہتے ہیں ڈاکٹر ضیا الدین کا خون رائیگاں نہیں جائے گا۔
وزیر اعلیٰ فل الفور ایکشن لے کے ایسے نالا ئق وزیر کو فارغ کریں اگر حکومت نے بے حسی دکھائی تو صوبہ بھر کے ہسپتالوں میں مکمل ہڑتال اور ایمر جنسی سروسز بھی بند کردیں گے۔

About Author

Leave A Reply