ملک ریاض کی بیٹیوں نے مسلح افراد کے ساتھ مبینہ طور پر ماڈل عظمیٰ خان کے گھر پر حملہ کیا، تشدد، گالیاں

0

اسلام آباد (ای این این ایس) سوشل میڈیا پر کچھ وڈیو کلپس وائرل ہو رہے ہیں جن میں دیکھا جا سکتا ہے کہ کچھ خواتین اپنے مسلح گارڈز کے ساتھ ایک گھر میں داخل ہوکر توڑ پھوڑ اور اس گھر میں موجود دو خواتین پر تشدد اور ان کو حراساں کر رہی ہیں۔
اس حوالے سے معلوم ہوا ہے کہ ماڈل اور اداکارہ عظمیٰ خان نے پولیس کے پاس رپورٹ جمع کرائی ہے کہ ان کو ملک کے بااثر ریئل اسٹیٹ ٹائکون ملک ریاض کی دو بیٹیوں نے 12 مسلح گارڈز کے ساتھ گھر میں رات کے وقت گھس کر تشدد کا نشانہ بنایا۔
رپورٹ میں امبر ملک اور پشمینہ ملک کے نام دیے گئے ہیں جنہوں نے مسلح گارڈز کے ساتھ ان کے ساتھ نہ صرف تشدد کیا بلکہ گالیاں اور جان سے مارنے اور اٹھوا لینے کی دھمکیاں بھی دیں۔
وڈیو میں دیکھا اور سنا جا سکتا ہے کہ خواتین، عظمیٰ خان سے کسی عثمان نامی شخص کا پوچھ رہی ہیں کہ اس کے ساتھ کیا تعلق ہے؟

اس حوالے سے انسانی حقوق کے لیے کام کرنے والے کارکنان نے واقع کو سوشل میڈیا پر اٹھاتے ہوئے ملکی اعلیٰ اداروں سے انصاف کا مطالبہ کیا ہے۔ دوسری جانب معاملے کو دبانے کے لیے اہم لوگ سرگرم ہو گئے ہیں۔

ای این این ایس کو موصول ہونے والی فوٹیج میں خواتین اور مسلح افراد کو دیکھا جا سکتا ہے۔ واضح رہے کہ کچھ روز قبل کرنل کی مبینہ بیوی کی وڈیو وائرل ہوئی تھی جس میں وہ پولیس والوں کے ساتھ الجھ پڑی تھی۔

دوسری جانب ملک ریاض نے اپنے ٹویٹر اکاؤنٹ سے تردید کرتے ہوئے لکھا کہ عثمان اس کا بھتیجا نہیں اور نہ ہی کیس سے اس  کاکوئی تعلق ہے۔

دریں اثنا ایک خاتون آمنہ عثمان نے اپنے وڈیو پیغام میں حملے کی زمہ داری قبول کرتے ہوئے کہا کہ ملک ریاض کا اس معاملے سے کوئی لینا دینا نہیں۔ اس نے اپنی شادی شدہ زندگی بچانے کے لیے انتہائی قدم اٹھایا اور اس کا شوہر عثمان اچھا آدمی نہیں۔

About Author

Leave A Reply