عام انتخابات کے بعد سندھ کی  تاریخ  میں پہلی بار خاتون وزیر اعلیٰ بن نے کا امکان، فریال تالپور مضبوط امیدوار

0

اسلام آباد(تجزیہ: لالا حسن) 2018 کے عام انتخابات کے بعد سندھ میں اگر پاکستان پیپلز پارٹی نے اکثریت حاصل کر لی تو سندھ کی تاریخ میں پہلی مرتبہ  خاتون وزیر اعلیٰ مقرر ہونگی۔زرداری ہائوس کے قریبی ذرائع کے مطابق پی پی نے اکثریت حاصل کرلی تو سندھ میں فریال تالپور کو وزیر اعلیٰ  مقرر کیا جائیگا۔ اس لیے انہوں قومی اسیمبلی کی بجاء صوبائی اسیمبلی پر نامزدگی فارم جمع کرائے ہیں۔

واضح رہے کہ مخالفین فریال تالپور کو سندھ کا ڈیفیکٹو وزیر اعلیٰ  بھی کہتے رہے ہیں، جب کہ آزاد جموں کشمیر میں ان کے مخالفین الزام لگاتے رہے تھے کہ  پی پی حکومت کے اہم فیصلہ وہ لیا کرتی تھیں۔  فریال ٹالپور پی پی پی پارلیمنٹرین  کے صدر اور پاکستان کے سابق صدر آصف علی زرداری کی ہمشیرہ ہیں اور بلاول بھٹو زرداری کی خالہ ہونے کے ساتھ ساتھ پی پی کی انتہائی اثر و رسوخ رکھنے والی خاتون سمجھی جاتی ہیں۔

سینئر صحافی اور تجزیہ کار سہیل سانگی  نے ای این این کو بتایہ کہ  اگرپی پی سندھ سے جیت جاتی ہے تو فریال وزیر اعلیٰ بن سکتی ہیں،وہ مضبوط امیدوار ہو سکتی ہیں۔ ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ فریال تالپور کو  سید یا شاہ لابی سے خطرہ ہو سکتا ہے کیونکہ پی پی اور یہاں تک کہ حزب اختلاف میں یے لابی کافی مضبوط ہے، اس لیے وہ لابی چاہیگی کہ سندھ کا آنے والا وزیر اعلیٰ  کوئی سید ہو۔

اس حوالے سے آصف زرداری نے اعلان تو کیا ہے کہ مراد علی شاہ دوبارہ ان کے وزیر اعلیٰ ہونگے لیکن یے بات زرداری صاحب نے مخدوم امین فہیم کے لیے بھی کہی تھی لیکن وہ خود صدر بن بیٹھے۔  واضح رہے کہ فریال تالپور سیاسی طور پر کافی طاقتور خاتون سمجھی جاتی ہیں اور 2005 کے بلدیاتی انتخابات میں جہاں پی پی پی کو لاڑکانہ تک سے ہرا دیا گیا تھا وہاں ان حالات میں فریال تالپور نے نواب شاہ کی ضلع ناظمی جیت کر سب کو حیران کر دیا تھا۔ انہوں نے کافی طاقتور سمجھی جانی والی شخصیات کو بھی تگنی کا ناچ نچایا ہے اور کافی لوگ ان سے مل کر پی پی پی شامل ہوتے رہے ہیں۔ دوسرے الفاظ میں وہ پہلے ہی اپنی کچن کیبنٹ بنا چکی ہیں۔

 واضح رہے  کہ فریال تالپور لاڑکانہ کے حلقہ 10 سے نامزدگی فارم جمع کرا چکی ہیں۔ جب کہ گذشتہ اسیمبلی میں وہ رکن قومی اسیمبلی تھی۔

دوسری جانب پی ٹی آئی، غرینڈ ڈیموکریٹک الائنس و دیگر جماعتوں کے رہنمائوں کا کہنا ہے کہ پی پی پی کو وہ سندھ جیتنے نہیں دینگے۔

About Author

Leave A Reply