عافیہ صدیقی کے کیس پر امریکا میں وکلا کو کروڑوں روپے دیے ہیں، ڈاکٹر فوزیہ کی عدالت کو آگاہی

0

کراچی (ای این این ایس) سندھ ہائیکورٹ میں امریکہ میں قید ڈاکٹر عافیہ صدیقی کی وطن واپسی سے متعلق درخواست کی سماعت جمعرات کی صبح ہوئی۔
اس دوران عدالت نے وفاقی حکومت سے پیش رفت رپورٹ طلب کی ہے۔
عدالت نے درخواست گزار “مرسی پٹیشن” کا طریقے کار بھی طلب کرلیا۔
عدالت نے درخواست کی مزید سماعت 10 جون تک ملتوی کردی۔
عدالت نے ڈپٹی اٹارنی جنرل کو ہر پیش رفت رپورٹ سے عافیہ صدیقی کے اہلخانہ کو آگاہ کرنے کی بھی ہدایت کی۔
آپ جو بھی کوششیں کر رہے ہیں درخواست گزار کو آگاہ کرتے رہیں، جسٹس محمد علی مظہر نے ڈپٹی اٹارنی جنرل کو ہدایت کردی۔
وفاقی حکومت نے عافیہ صدیقی سے متعلق غیر متعلقہ فورم پر رابطہ کیا ہے، فوزیہ صدیقی
وفاقی حکومت کہہ رہی ہے کہ عافیہ صدیقی خود بات نہیں کرنا چاہتی۔
کیا ایک ماں اپنے اولاد کے ساتھ بات نہیں کرے گی، فوزیہ صدیقی
حکومت نے ہماری محنت پر پانی پھیر دیا ہے، فوزیہ صدیقی

فوزیہ صدیقی نے عدالت کو بتایا کہ کروڑوں روپے آمریکہ میں وکلا کو ادا کر رہے ہیں۔ عافیہ صدیقی جس جیل میں ہے وہاں 600 قیدی کورونا وائرس کی وجہ سے انتقال کرچکے ہیں۔
عافیہ صدیقی کی جان کو خطرہ ہے، حکومت کچھ نہیں کررہی،
وفاقی حکومت جو کچھ بھی کر رہی ہے کم سے کم ہمیں اطلاع دے۔
غلط فورم پر رابطہ کرنے سے وفاقی حکومت کی درخواست غیر موثر ہوگئی ہے۔
ڈپٹی اٹارنی جنرل کا کہنا تھا کہ کورونا وائرس کی وجہ سے کونسل جنرل آف پاکستان کا اجلاس نہیں ہو سکا۔
ڈاکٹر عافیہ صدیقی کی بہن فوزیہ صدیقی نے بہن کو وطن واپس لانے کے لیے سندھ ہائیکورٹ میں درخواست دائر کررکھی ہے۔

About Author

Leave A Reply