سندھ کی دیہی ہنرمند خواتین کی بنائی ہوئی اشیاء دنیا میں فروغ پا رہی ہیں: ناصر حسین شاھ

0

کراچی(ای این این ایس) صوبائی وزیر بلدیات، مذھبی ھم آھنگی و جنگلات سید ناصر حسین شاہ نے 3روزہ سرتیوں سنگ کرافٹس میلہ کا افتتاح کردیا
سندھ رورل سپورٹ آرگنائزیشن اور سندھ حکومت کے تحت منعقدہ ساتوان سرتیوں سنگ کرافٹس اوشیئن مال کلفٹن میں شروع ہو گیا ہے۔
ناصر حسین شاہ نے میڈیا سے بات کرتے ھوئے کہا کہ سندھ کی ھنر مند خواتین کو ای کامرس کے ذریعے بین الاقوامی مارکیٹ تک رسائی دینے کیلئے سندھ حکومت کوشاں ھے۔ خواتین کو بااختیار بنانے کے لیے مختلف اقدامات اٹھائے گئے ہین۔
ان کا کھنا تھا کہ گھروں میں کام کرنے والی دیہیِ خواتین کو گھروں سے باھر نکال کر ان کے کاموں کو بڑے شھروں میں لانا سرسو کا قدم انتہائی قابل تعریف ھے۔ اس سے نہ صرف ان میں اعتماد ھوگا بلکہ یہ معاشی طور پر مستحکم ہوسکیں گی اور اپنی آمدنی اپنے بچوں کی اچھی غذا، تعلیم اور صحت پر خرچ کریں گی۔
انہوں نے کہا کہ سندہ کی دیہی خواتین ہنرمندوں کی بنائی ہوئی اشیاء دنیا میں فروغ پا رہی ہیں۔
صوبائی وزیر نے مزید کہا کہ یہ ساتواں سرتیون سنگ کرافٹس ایگزیبیشن ہے، ہماری مزید خواتین کو آگے آنا چاہئے اور اپنے فن کے فروغ کے لئے کوئی کسر نہ چھوڑیں۔
شہریوں نے ہاتھ سے بنی گھریلو مصنوعات، ملبوسات، اجرک، فرنیچر، ڈیکوریشن پیسز، خالص چمڑے سے بنے ہینڈ بیگ، بیڈشیٹس اور دیگرثقافتی اشیاء میں گہری دلچسپی لی۔
سرسو کے چیف ایگزیکٹو آفیسر محمد ڈتل کلھوڑو نے کہا کہ سندھ حکومت کی مالی معاونت سے دیہی علاقوں میں غربت کے خاتمے، ثقافتی ہنرمندوں کی حوصلہ افزائی کے لئے سرسوکا قیام 2006 عمل میں لایا گیا، اس وقت جیکب آباد، کشمور، گھوٹکی، شکارپور، سکھر، لاڑکانہ، قمبر شہداد کوٹ، خیرپور، نوشہروفیروز اور شہید بینظیر آباد اضلاع سمیت پوری سندھ میں غربت کے خاتمے کے پروگرام جاری ہے۔

About Author

Leave A Reply