سردار مہتاب عباسی و دیگر پر فرد جرم، گواہ طلب، ملزمان کا صحت جرم سے انکار

0

ایبٹ آباد (رپورٹ: دلدار ستی)
احتساب عدالت نے پی آئی اے میں سابق چیئرمین مشرف رسول ودیگرغیرقانونی تقرریوں کے ریفرنس میں سابق مشیرہوابازی سردارمہتاب احمد خان و دیگر پرفردجرم عائدکرتے ہوئے گواہوں کو طلب کرلیا۔ منگل کے روز احتساب عدالت میں سماعت کے دوران عرفان الاہی، سردار مہتاب احمد خان، طارق محمود پاشا، راحیل احمد اور مشروف رسول عدالت پیش ہوئے۔ اس موقع پرعدالت نے ملزمان پر فرد جرم عائد کر دی جبکہ ملزمان نے صحت جرم سے انکارکیا۔ عدالت نے آئندہ سماعت 2 گواہوں ارشد علی اور محمد محسود تاجور کو طلب کر لیا۔
اس موقع پرریفرنس کے شریک ملزم طارق محمود پاشا نے کہاکہ سیکرٹری کشمیر افیئر ہوں اور زلزلہ کے باعث مصروف ہوں پیش نہیں ہو سکوں گا، وکیل صفائی نے کہا کہ آئندہ سماعت کی تاریخ نومبر کی رکھی جائے،عدالت نے سماعت 29 اکتوبر تک ملتوی کردی ۔ سابق مشیر ہوا بازی سردار مہتا ب احمد خان جو مسلم لیگ(ن)کے مرکزی رہنماء اورسابق وزیراعظم محمد نواز شریف کے انتہائی قریبی اورپراعتماد ساتھی ہیں۔ سردار مہتاب احمد خان ایبٹ آباد سے 1985 میں منتخب ہوئے اورصوبائی وزیر قانون، صوبائی وزیر صحت رہے۔ بعد ازاں وفاقی وزیر امور کشمیر، وزیراعلیٰ این ڈبلیو ایف پی اورگورنر خیبرپختونخوا کے عہدوں پر فائز رہے۔
یاد رہے کہ وزارت اعلیٰ کے دوران نیب نے ان پر گندم سکینڈل کا مقدمہ بنایا جو بعد ازاں عدم ثبوت کی بناء پربری کردیا گیاتھا۔ سردار مہتاب احمد خان 2018کے انتخابات میں پارٹی کے ساتھ اختلافات کے باعث انتخابی عمل سے دور رہے تھے۔ احتساب عدالت میں مسلم لیگ(ن)کے کارکنوں عابد شاہ ترمذی، ضلعی سینئر نائب صدر سردار عبدالرشیداوردیگر عہدیدار بھی موجود تھے۔

About Author

Leave A Reply