جعفرآباد کی 20 سے زائد پولنگ اسٹیشن زبون حالی کا شکار، مرمت نہ ہو سکی

0

جعفرآباد (رپورٹ: اویس شیخ)حکومت بلوچستان کی جانب سے صوبے بھر میں انتخابات کے دوران زبون حال پولنگ اسٹیشنوں کی مرمت اور سہولیات کی فراہمی کے لیے کثیر رقم جاری کی گئی تاہم جعفرآباد میں پرائمری اسکول حاجی حسین بخش گولہ اور پرائمری اسکول غلام محمد جمالی سمیت 20 سے زائد پولنگ اسٹیشنوں کی مرمت کا کام نہیں ہوسکا، جس کے باعث پولنگ اسٹیشنیں زبون حال ہیں۔

Inside view of school, declared polling station. (ENNS)

حاجی حسین بخش پرائمری اسکول اور غلام محمد جمالی پرائمری اسکول جوائنٹ پولنگ اسٹیشن ہیں جن کی حالت زار ابتر ہے۔پولنگ اسٹینشوں کی عمارت ٹوٹ پھوٹ کا شکار ہیں اور پولنگ اسٹیشنوں میں کسی قسم کی کوئی سہولت بھی میسر نہیں ہے۔پرائمری اسکول حاجی حسین گولہ کی عمارت اور احاطے میں سیوریج کا گندا پانی تالاب کا منظر پیش کرریا ہے جبکہ پرائمری اسکول غلام محمد جمالی کی عمارت شدید خستہ حال ہے اکثر پولنگ اسٹیشنوں کی عمارت کی دیواریں اور چھتوں میں دراڑیں پڑی ہوئی ہیں

پولنگ اسٹیشن پرائمری اسکول غلام محمد کی عمارت کی چھت تباہ حال ہے اور کھڑکیاں اور دروازے بھی ٹوٹے ہوئے خستہ حال پولنگ اسٹیشنوں میں پولنگ کے روز مرد اور خواتین ووٹرز کو شدید پریشانی اور مشکلات کا سامنا کرنا ہوگا جبکہ پرائمری اسکول حاجی حسین بخش گولہ اور پرائمری اسکول غلام محمد جمالی کے پولنگ اسٹیشنوں میں مجموعی طور پر مرد اور خواتین ووٹرز کی تعداد چار ہزار سے زائد ہے پولنگ اسٹیشن پرائمری اسکول غلام محمد جمالی میں 1048 خواتین ووٹرز جبکہ 1337 مرد ووٹرز ووٹ کاسٹ کرینگے ان پولنگ اسٹیشنوں میں مرد اور خواتین ووٹرز کے بیٹھنے کے لیے بھی کوئی خاص انتظام نہیں ہے۔

دونوں پولنگ اسٹیشن جوائنٹ پولنگ ہیں جن میں مرد اور خواتین ووٹرز کے لیے الگ الگ پولنگ بوتھ قائم کیے گئے ہیں۔ ووٹرس اور امیدواروں کی جانب سے حکومت سے مطالبہ کیا گیا ہے کہ مرمت کا کام جلد شروع کیا جائے۔

About Author

Leave A Reply